ایسی تحاریر جن میں تخلیقیت اور سادگی کے ساتھ سجمھ کا عنصر حاوی ھو۔

انسان اور شھد کی مکھیاں دونوں سماج بنا کر رھتے ھیں۔دونوں اس سماج کو قایم رکھنے کیلیے کام کرتے ھیں۔جب شھد کی مکھیاں کام کرتی ھیں تو وہ سب کارکن ،ورکر کھلاتی ھیں مگر جب انسان اپنے سماج کو قایم رکھنے کیلیے کام کرتا ھے تو کوئی َ نائی َ ََََقصائی ََ، حلوائیَ،دھوبی َ کمھارَ،تانگے والاَ، جمع دارَ، ریڑھی والا َ، ۔بن جاتا ھے ھم یہ کیوں نھیں کھتے ورکر ،کارکن صرف آخر ھم سب ایک ھی چھتے کے لیے ھی تو کام کر رھے ھیں ھم سب کارکن مکھیاں ھی تو ھیں کیا جانور ھم سے زیادہ مھذب ھیں۔ کارکن مکھیاں ایک کام نھیں کرتی کوئی چھتے کی صفائی کرتی ھے کوئی چھتے کو گرم رکھتا ھے کوئی شھد بناتے ھیں۔انسان بھی تو اسی چھتے کے لیے مختلف کام کرتا ھے تو آخر وہ کیوں صرف کارکن نھیں کھلاتا اُ سے صرف ورکر کا خطاب کیوں نھیں دیا جاتا۔

written by: Fareeha Farooq

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

ٹیگ بادل

%d bloggers like this: